دبئی میں پاکستانی لڑکی کی ایسی حرکت کہ دو بھائیوں کی ’غیرت‘ جاگ گئی اور پھر خون ہی خون۔۔۔

CNN PoIntابوظہبی (مانیٹرنگ ڈیسک) ’غیرت‘ کے نام پر قتل کی بہیمانہ وارداتیں ہمارے ہاں تو روز کا معمول ہے لیکن پہلی دفعہ دو پاکستانی بھائیوں نے یہ حیوانیت دبئی میں بھی متعارف کروا دی۔
”خلیج ٹائمز“ کے مطابق ایک پاکستانی نوجوان کے ساتھ پسند کی شادی کرنے والی لڑکی کے بھائیوں نے اپنی بہن کے ’جرم‘ پر مشتعل ہو کر نوجوان کے خون میں ہاتھ رنگ لئے۔ تحقیقات کے دوران معلوم ہوا کہ خونی بھائیوں نے قتل کا منصوبہ بنانے کے بعد نوجوان کا تعاقب کیا اور موقع پاکر اسے سفاکانہ انداز میں قتل کردیا۔ قاتل بھائیوں کی عمریں 34 اور 26 سال ہیں اور ان میں سے بڑا بھائی مقتول کی لاش ملنے سے 6 گھنٹے پہلے ہی متحدہ عرب امارات سے فرار ہوچکا تھا۔ چھوٹا بھائی، جو کہ ڈرائیور کے طور پر کام کرتا ہے، اس پر اعانت جرم کے الزامات عائد کئے گئے ہیں، جبکہ بڑے بھائی پر قتل کے الزامات عائد کئے گئے ہیں۔

مزید پڑھیں: نوجوان لڑکیوں کو کس طرح عرب ممالک لاکر شرمناک کام پر مجبور اور مردوں کو بلیک میلنگ کے لئے استعمال کیا جاتا ہے
پولیس کو ستوہ کے علاقے میں مقتول کی لاش ایک گاڑی میں ملی تھی۔ یہ گاڑی ایک مقامی کمپنی کی ملکیت ہے اور کمپنی نے اسے ڈرائیونگ کے لئے 26 سالہ ملزم کے حوالے کررکھا تھا۔ تحقیق کاروں کا کہناہے کہ ’غیرت‘ کے نام پر قتل جیسے انسانیت سوز جرم کا ذکر دبئی میں اس سے پہلے کبھی سننے میں نہیں آیا تھا۔عدالت میں مقدمے کی کارروائی جاری ہے، جبکہ اگلی سماعت 28 فروری کو ہو گی۔

Editor
Editor
Web Administrator at CNN POINT Admin is the Web Administrator of CNN Point, Admin is the Official Author of CNN Point