سپریم کورٹ میں وزیراعظم کی نا اہلی کے لیے درخواست دائر


اسلام آباد: سپریم کورٹ میں وزیراعظم نوازشریف کومعطل کرکے نااہل قراردینے سے متعلق آئینی درخواست دائرکردی گئی۔
 سپریم کورٹ میں محمود اخترنقوی کی جانب سے وزیراعظم نوازشریف کو معطل کرکے نااہل قراردینے سے متعلق آئینی درخواست جمع کرادی گئی ہے۔ درخواست میں نوازشریف کے بچوں، کیپٹن صفدر، اسحاق ڈار، طارق شفیع سمیت الیکشن کمیشن، سیکریٹری خزانہ، چیئرمین نیب، گورنراسٹیٹ بینک، چیئرمین نیشنل بینک کو بھی فریق بنایا گیا ہے۔
درخواست میں موقف اختیارکیا گیا ہے کہ نوازشریف جے آئی ٹی کی رپورٹ میں اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے پائے گئے، انہوں نے عوامی عہدوں کا فائدہ اپنے آپ اوربچوں کو دیا، نوازشریف نے دوراقتدارمیں اپنے کاروبارکو پروان چڑھایا جب کہ اثاثے اندرون اوربیرون ملک بنائے اوربچوں کے نام منتقل کئے۔
درخواست کے مطابق جے آئی ٹی رپورٹ میں وزیراعظم کے تمام اثاثوں کے بارے میں وضاحت درج ہے، نواز شریف اوران کے بچوں کے اثاثے ذرائع آمدن سے زیادہ پائے گئے، کیپٹن صفدر، اسحاق ڈار نے بھی ناجائز طریقہ کار سے دولت میں اضافہ کیا، نواز شریف اور فیملی نے سپریم کورٹ میں غلط اورجعلی دستاویز جمع کرائیں جب کہ عدالت جعلی ڈگری کیس میں غلط معلومات فراہمی پر 9 ایم این ایز کو نااہل قراردے چکی ہے۔
درخواست گزار کی جانب سے استدعا کی گئی کہ نوازشریف کودرخواست پرفیصلے تک عہدے سے معطل کیا جائے جب کہ انہیں عدالت کے ساتھ غلط بیانی کرنے پراور جے آئی ٹی رپورٹ کی بناء پرنااہل قراردیا جائے۔

Shahid Ghuman
Shahid Ghuman
شاہد گھمن ورسٹائل صحافی ہیں اور ان کا صحافت کا 20سالہ تجربہ ہے۔ان کی بین الاقوامی امور پر گرفت ہے۔شاہد گھمن نہ صرف صحافی ہیں بلکہ اینکر پرسن ہیں اور مختلف ٹی وی پروگرامز کے میزبان بھی ہیں۔