معمر خواتین کو لوٹ کر سفاکانہ طریقہ سے قتل کرنے والا خطرناک ملزم یوسف پولیس مقابلہ میں ہلاک


ملزم محمد یوسف نے گوجرانوالہ میں صرف 45دنوں میں 6خواتین کو لوٹ کرہلاک کیا ۔
گوجرانوالہ (سی این این پوائنٹ )صنعت روڈ گلہ پائل میرج ہال والاکے قریب 27معمر خواتین کو لوٹ کر سفاکانہ طریقہ سے قتل کرنے والا ملزم یوسف پولیس مقابلہ میں اپنے ساتھی کی فائرنگ سے ہلاک ۔ملزم نے گوجرانوالہ میں صرف45دنوں میں 6خواتین کو ہلاک کیا۔ چھینا گیا موٹرسائیکل، پسٹل ،شناختی کارڈ اور نقدی 1700روپے برآمد ۔ ساتھی فائرنگ کرتے ہوئے فرار۔ ہلاک ہونے والے شخص کی شناخت محمد یوسف سکنہ سیالکوٹ حال رانا کالونی کے نام سے ہوئی ۔ہلاک ہونے والا شخص ریکارڈ پڑتال سے 27معمر عورتوں کا قاتل نکلا۔مفرور ساتھی کی گرفتاری کے لئے چھاپے۔تفصیلات کے مطابق سٹی پولیس آفیسر اشفاق خان کے حکم سے شر پسند و جرائم پیشہ عناصر کی تلاش اور انسداد جرائم کے لئے ضلع بھر میں پولیس نے جابجا ناکہ بندی کروا رکھی تھی۔سی آئی اے پولیس سے اے ایس آئی ارشد بھٹے وڈ، محمد ادریس، غلام مرتضیٰ، ساجد حسین، ولی داد وغیرہ نے بھی اس ضمن میں صنعت روڈ پر ناکہ بندی کی ہوئی تھی کہ اس دوران لائن پار سے موٹر سائیکل پر سوار دو کس مشکوک اشخاص آئے جنہیں رکنے کا اشارہ کیا گیا۔ملزمان نے رکنے کی بجائے موٹر سائیکل پھینک کر جوار میں گھس کرپولیس پارٹی پر فائرنگ شروع کر دی۔ پولیس پارٹی نے بھی حفاظت خود اختیاری کے تحت جوابی فائرنگ کی ۔فائرنگ رکنے پر موقعہ پر اپنے ہی ساتھی کی فائرنگ سے ہلاک ہونے والے ایک شخص کی لاش ملی جب کہ دوسرا شخص فرار ہونے میں کامیاب ہو گیا ۔ ہلاک ہونے والے شخص کے قریب سے پسٹل ، جیب سے شناختی کارڈ اور نقدی اور موقع پر پھینکا گیا موٹر سائیکل برآمد ہوا۔پڑتال ریکارڈ سے ہلاک ہونے والے شخص کی محمد یوسف سکنہ سیالکوٹ حال رانا کالونی کے نام سے شناخت ہوئی۔یہ بھی معلوم ہوا کہ ملزمان کے زیر استعمال موٹر سائیکل گزشتہ روز تھانہ سبزی منڈی کے علاقے سے چھینا گیا تھا۔ہلا ک ہونے والے ملزم کے بارے میں سنسنی خیز انکشافات سامنے آئے ۔ڈی ایس پی سی آئی اے عمران عباس چدھڑ نے تفصیلات بیان کرتے ہوئے بتایا کہ ملزم لاری اڈوں، رکشہ اڈوں اور رش والے مقامات سے معمر عورتوں کو مدد کرنے کے بہانے اپنے ساتھ لے جاتا اور سنسان جگہ پر لے جا کران سے نقدی و قیمتی اشیاء چھین کر تشدد کر کے انہیں قتل کر دیتا۔انہوں نے مزید بتایا کہ ملزم نے سیالکوٹ میں 20،گجرات میں ایک اور گوجرانوالہ میں 6عورتوں کو قتل کیا تھا ۔سیالکوٹ میں درج مقدمات کے حوالے سے ملزم تقریباً آٹھ سال جیل رہا اور ہال ہی میں رہا کو کر باہر آیا تھا۔رہا ہوتے ہی ملزم نے اپنی پرانی جرائم پیشہ زندگی کو دہراتے ہوئے سردار فیملی ہسپتال کے قریب معمر عورت مسرت خانم کے گھر داخل ہوا اور اس سے چھ ہزار روپے چھین کر اس کا سرزمین پر پٹخ کر ہلاک کیا ۔ نذیراں بی بی کو سرفراز کالونی سے ورغلا کر چندا قلعہ کے قریب لے گیا اور اس سے چار ہزارر وپے چھین کر تشدد کر کے ہلا ک کے کر دیا ۔مریدکے سے بوڑھی عورت کو ورغلا کر کے موضع گھنیاں کامونکے کے قریب لوٹ کر قتل کیا۔ مسمات رقیہ بی بی کو کنگنی والا سے چاند گاڑی پر بٹھایا اور فیروز والا کے قریب اس سے پانچ سو روپے چھینے اوربعد ازاں تشدد کانشانہ بنا کر ہلاک کیا۔ رکھ کیکرانوالی کی رہائشی مسمات سلمیٰ بی بی کو ورغلا کر سیالکوٹ بائی پاس کے قریب لایا جہاں اس سے نقدی چار سو روپے چھین کر اسے قتل کیا ۔اعوا ن چوک سے معمر خاتون کو ورغلا کر چندا قلعہ کے قریب اس سے نقدی چھین کر اسے قتل کر دیا ۔ تمام وارداتیں دو ماہ کے دوران ہوئیں۔سٹی پولیس آفیسر اشفاق خان کی ہدایت پر معمر عورتوں کو ہلاک کرنے والے ملزمان کی گرفتاری کے لئے اضلاع کی دیگر پولیس ٹیموں کے ساتھ ساتھ سی آئی اے پولیس کی ٹیم بھی متحرک تھی ۔ دوران تفتیش یہ بات بھی سامنے آئی کہ ہلاک ہونے والا ملزم محمد یوسف و ارداتوں کے دوران نہایت سفاکی کا مظاہرہ کرتا ۔سیالکوٹ میں ملزم سیریل کلر کے نام سے مشہور تھا ۔مقدمہ کا اندراج کر کے مفرور ملزم کی گرفتاری کے لئے ریڈ کئے جا رہے ہیں۔خطرناک ملزم اور معمر عورتوں کے سیریل کلر کی ہلاکت پر علاقے کے لوگوں نے سی آئی اے اورضلعی پولیس کو خراج تحسین پیش کیا ۔ 

 
Shahid Ghuman
Shahid Ghuman
شاہد گھمن ورسٹائل صحافی ہیں اور ان کا صحافت کا 20سالہ تجربہ ہے۔ان کی بین الاقوامی امور پر گرفت ہے۔شاہد گھمن نہ صرف صحافی ہیں بلکہ اینکر پرسن ہیں اور مختلف ٹی وی پروگرامز کے میزبان بھی ہیں۔